Shirk is the greatest nullifier of Islaam – Shaykh Saaleh bin Sa'ad As-Suhaimee

شیخ صالح السحیمی حفظہ اللہ فرماتے ہیں:

نواقض اسلام میں سے سب سے بڑا اور سب سے خطرناک ناقض اللہ  تعالیٰ کے ساتھ شرک کرنا ہے، کیوں کہ ایمان کے رکن میں سے ایک رکن اللہ تعالیٰ کے لیے اخلاص اپنانا ہے۔ پس جس نے بھی اللہ تعالیٰ کے ساتھ شرک کیا اس نے کیا چیز کھو دی ؟ اس نے اخلاص کو کھو دیا، بلکہ توحید کو ہی کلیۃً کھو دیا۔۔۔چنانچہ اللہ تعالیٰ کے ساتھ شرک کرنا  وہ سب سے بڑا وہ گناہ ہے کہ  جس کے ذریعے سے اللہ تعالیٰ کی نافرمانی کی جاتی ہے۔ اور ایسا کیوں نہ ہو یہ تو اللہ تعالیٰ کا حق ہے جو لے کر یا چھین کر نعوذ باللہ غیر کو دے دیا گیا۔

شرک آج کے اس دور میں  بالکل منتشر اورعام ہے اور یہ سب سے عظیم ترین منکر ہے اورکتنی عجیب بات ہے کہ یہ جو خوارج کلاب النار ہیں  یہ دعوی کرتے ہيں کہ ہم منکرات کا نکیر کرتے ہيں اور منکرات پر انکار کرتے ہیں،  اوربلاشبہ واجب ہے کہ منکرات پر انکار کیا جائے لیکن  ان شرعی طریقوں سے جو رسول اللہ صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم نے بیان فرمائے ہیں ،لیکن یہ (خوارج) کسی  پر اس شرک اکبر کا رد نہیں کرتے۔ چنانچہ ان کے جو بڑے بڑے لیڈران ہیں جو ان کو اس قسم کے گمراہ کن فتاوی کی تعلیم دیتے پھرتے ہیں، آپ ان کو قبروں کے طواف، مزاروں اور جو اس میں دفن فوت شدگان ہیں ان کے لیے ذبح کرنے، ان کے نام کی نذر و نیاز دینے کی تائید کرتے ہوئے پائیں گے، اس سے کسی کے سکونِ دل میں نہ کوئی جنبش ہوتی ہے نہ وہ ٹس سے مس ہوتا ہے۔ اور دوسری طرف آپ ان کو  دیکھیں گے کہ باقاعدہ لشکر اور گروہ  بنا لیا ہے انہوں نے  اس مملکت کے خلاف گویا کہ  اس سطح ارضی پر (پوری دنیا میں) اس ملک کے علاوہ کوئی ان کو دشمن ہی نہیں ہے۔ یہ مملکت سعودی عرب جسے اللہ تعالیٰ  کی اللہ تعالی نے حفاظت  فرمائی ہے کیونکہ یہ اس کی توحید اور توحید کی سرحدوں کی حفاظت  کرتی ہے۔  فلا حول ولا قوة إلا بالله ( نہیں ہے نیکی کرنے کی اور برائی سے بچنے کی طاقت سوائے اللہ سبحانہ و تعالیٰ کے توفیق سے)۔

تفصیل کے لیے مکمل مقالہ پڑھیں