Ruling regarding singing and music in Islaam – Various 'Ulamaa

اللہ تعالی کا فرمان ہے:

﴿وَمِنَ النَّاسِ مَنْ يَّشْتَرِيْ لَهْوَ الْحَدِيْثِ لِيُضِلَّ عَنْ سَبِيْلِ اللّٰهِ بِغَيْرِ عِلْمٍ ﴾ (لقمان: 6)

(اور لوگوں میں سے بعض وہ ہیں جو غافل کرنے والی  اور لغو بات خریدتے ہیں، تاکہ بےعلمی کے ساتھ لوگوں کو اللہ کی راہ سے بہکائیں)

اس آیت  میں وارد لفظ ’’لَهْوَ الْحَدِيْثِ‘‘ کی اکثر مفسرین وغیرہ علماء کرام نے گانے اور آلات موسیقی سے تفسیر کی ہے۔

 

 

اور امام بخاری رحمہ اللہ نے اپنی صحیح 5588 میں نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم سے روایت بیان فرمائی کہ آپ نے فرمایا:

’’لَيَكُونَنَّ مِنْ أُمَّتِي أَقْوَامٌ يَسْتَحِلُّونَ الْحِرَ، وَالْحَرِيرَ، وَالْخَمْرَ، وَالْمَعَازِفَ‘‘

(یقیناً ضرور میری امت میں سے ایسے لوگ ہوں گے جو حر(زنا)، (مردوں کے لیے) ریشم، شراب اور معازف (آلات موسیقی) کو حلال کردیں گے)۔

 

تفصیل کے لیے مکمل مقالہ پڑھیں۔