menu close menu

کیا ہم نصاری کو بھی کافر نہیں کہہ سکتے؟ – شیخ صالح بن فوزان الفوزان

  Can't we say "Kuffaar" even for the Christians? – Shaykh Saaleh bin Fawzaan Al-Fawzaan

کیا نصاریٰ کی بھی عام تکفیر نہیں کی جاسکتی؟

فضیلۃ الشیخ صالح بن فوزان الفوزان حفظہ اللہ

ترجمہ: طارق علی بروہی

مصدر: أسئلة وأجوبة في مسائل الإيمان والكفر سوال 23

پیشکش: توحیدِ خالص ڈاٹ کام


بسم اللہ الرحمن الرحیم

 

سوال: اس شخص کے بارے میں کیا حکم ہے جو یہ کہتا ہے کہ: اگر کوئی شخص نصاری کی تکفیر نہیں کرتا یہ سوچتے ہوئے کہ شاید ان تک سورۂ مائدہ کی یہ آیت نہ پہنچی ہوکہ ﴿لَقَدْ كَفَرَ الَّذِينَ قَالُوا إِنَّ اللَّهَ ثَالِثُ ثَلَاثَةٍ﴾ (المائدۃ: 73) (یقیناً ان لوگوں نے کفر کیا جنہوں نے کہا کہ اللہ تعالی تین میں کا تیسرا ہے)، تو اس کی تکفیر نہیں کی جائے گی جب تک اس کے علم میں یہ آیت نہ لائی جائے؟

 

 

جواب: یہود ونصاری کی تکفیر محض سورۂ مائدہ ہی تک محدود نہیں بلکہ قرآن کریم کے کئی ایک مقامات پر ان کی تکفیر کی گئی ہے۔ اور ساتھ ہی ان کا کفر توان کے اقوال وافعال اور ان کتب سے جو وہ پڑھتے پڑھاتے ہیں بالکل ظاہر وعیاں ہے۔ جیسا کہ ان کا یہ کہنا کہ: مسیح علیہ الصلاۃ والسلام اللہ تعالی کے بیٹے ہیں([1])

، یا پھر: اللہ تعالی تین (معبودوں) میں سے تیسرا ہے([2])،

یا پھر: اللہ تعالی ہی مسیح ابن مریم علیہما الصلاۃ والسلام ہے([3])۔

اسی طرح سے یہود کا کہنا کہ: عزیر علیہ الصلاۃ والسلام اللہ تعالی کے بیٹے ہیں([4])،

یاپھر: اللہ تعالی فقیر ہے اور ہم غنی ہیں([5])،

یا: اللہ تعالی کا ہاتھ بندھا ہوا ہے([6])۔

اور اس کے علاوہ بہت سے اقوال جوخود  ان کےاپنی کتابوں میں موجود ہیں، پس ان کا کفر سورۂ مائدہ کے علاوہ بھی بالکل ظاہر ہے۔

 


[1] ﴿وَقَالَتِ النَّصَارَى الْمَسِيحُ ابْنُ اللَّهِ﴾ (التوبۃ: 30) (اور کہا نصاری نے کہ مسیح اللہ تعالی کے بیٹے ہیں) (توحید خالص ڈاٹ کام)

 

 

[2] حوالہ سوال میں مذکور ہے۔

 

 

[3] ﴿لَقَدْ كَفَرَ الَّذِينَ قَالُوا إِنَّ اللَّهَ هُوَ الْمَسِيحُ ابْنُ مَرْيَمَ﴾ (المائدۃ: 17، 72) (یقینا ًان لوگوں نے کفر کیا جنہوں نے کہا کہ مسیح ابن مریم ہی اللہ ہیں) (توحید خالص ڈاٹ کام)

 

 

[4] ﴿َقَالَتِ الْيَهُودُ عُزَيْرٌ ابْنُ اللَّه﴾ (التوبۃ: 30) (اور کہا یہود نے کہ عزیر اللہ تعالی کے بیٹے ہیں) (توحید خالص ڈاٹ کام)

 

 

[5] ﴿لَقَدْ سَمِعَ اللَّهُ قَوْلَ الَّذِينَ قَالُوا إِنَّ اللَّهَ فَقِيرٌ وَنَحْنُ أَغْنِيَاء﴾ (آل عمران: 181) (یقیناً اللہ تعالی نے ان لوگوں کی بات سن لی جنہوں نے کہا کہ اللہ تعالی فقیر ہے اور ہم غنی ہیں) (توحید خالص ڈاٹ کام)

 

 

[6] ﴿وَقَالَتِ الْيَهُودُ يَدُ اللَّهِ مَغْلُولَةٌ غُلَّتْ أَيْدِيهِمْ وَلُعِنُوا بِمَا قَالُوا بَلْ يَدَاهُ مَبْسُوطَتَانِ يُنْفِقُ كَيْفَ يَشَاءُ﴾ (المائدۃ: 64) (اور یہودیوں نے کہا کہ اللہ تعالٰی کے ہاتھ بندھے ہوئے ہیں۔ انہی کے ہاتھ بندھے ہوئے ہیں اور ان کے اس قول کی وجہ سے ان پر لعنت کی گئی، بلکہ اللہ تعالٰی کے دونوں ہاتھ کھلے ہوئے ہیں جس طرح چاہتا ہے خرچ کرتا ہے) (توحید خالص ڈاٹ کام)

 

 

  

October 4, 2012 | الشيخ صالح بن فوزان الفوزان, عقیدہ ومنہج, مقالات | 0

tawheedekhaalis is on Mixlr

Tawheedekhaalis.com

Tawheedekhaalis.com