Islamic ruling regarding joking and pranks

مذاق اور شرارت کرنے کا شرعی حکم

جمع و ترتیب: طارق علی بروہی

مصدر: مختلف مصادر۔

پیشکش: توحیدِ خالص ڈاٹ کام


بسم اللہ الرحمٰن الرحیم

مزاح کا حکم

دینی امور اور شعائر کا مذاق اڑانا کفر ہے

مذاق میں جھوٹ نہ ہو

مذاق میں کسی مسلمان کو خوفزدہ کرنا نہ ہو

لوگوں پر طنز کرتے ہوئے مذاق نہ اڑایا جائے

جسمانی عیوب کا مذاق اڑانا  اور دوسروں کی نقل اتارنا

خود کو بہتر اور دوسروں کو حقیر سمجھ کر مذاق اڑانا

مزاح اس کثرت سے نہ ہو کہ باقاعدہ اوڑھنا بچھونا اور پیشہ ہی بنالیا جائے

سلف صالحین اور مزاح

تفصیل کے لیے مکمل مقالہ پڑھیں۔

mazaq_shararat_pranks_ka_hukm