طاغوت کی تعریف – شیخ محمد بن صالح العثیمین

طاغوت کی تعریف – شیخ محمد بن صالح العثیمین

Definition of Taghoot – Shaykh Muhammad bin Saaleh Al-Uthaimeen

طاغوت کی تعریف   

فضیلۃ الشیخ محمد بن صالح العثیمین  رحمہ اللہ   المتوفی سن 1421ھ

(سابق سنئیر رکن کبار علماء کمیٹی، سعودی عرب)

ترجمہ: طارق علی بروہی

مصدر: القول المفید علی کتاب التوحید ص 21 ط دار ابن الجوزی۔

پیشکش: توحیدِ خالص ڈاٹ کام


بسم اللہ الرحمٰن الرحیم

طاغوت طغیان سے مشتق ہے جو کہ صفت مشبہہ ہے۔

اور طغیان حد سے تجاوز کرنے کو کہتے ہیں، جیسا کہ اللہ تعالی کے اس فرمان میں ہے:

﴿اِنَّا لَمَّا طَغَا الْمَاۗءُ حَمَلْنٰكُمْ فِي الْجَارِيَةِ﴾ (الحآقۃ: 11)

(بلاشبہ ہم نے ہی جب پانی میں طغیانی آئی تو تمہیں کشتی میں سوار کیا)

یعنی پانی اپنی حد سے تجاوز کرگیا۔

جامع ترین بات جو اس کی تعریف میں کی گئی ہے وہ وہ ہے جو حافظ ابن القیم  رحمہ اللہ نے ذکر فرمائی ہے:

الطاغوت ما تجاوز به العبد حده من متبوع، أو معبود، أو مطاع. ومراده من كان راضياً بذلك