menu close menu

حقیقی علماء کرام کو پہچانیں – شیخ محمد بن غالب العمری

Know the real Ulamaa – Shaykh Muhammad bin Ghaalib Al-Umaree

حقیقی علماء کرام کو پہچانیں   

فضیلۃ الشیخ محمد بن غالب العمری حفظہ اللہ

(تلمیذ المشایخ مقبل بن ہادی، ربیع المدخلی، عبدالمحسن العباد، عبداللہ البخاری)

ترجمہ: طارق علی بروہی

مصدر: شیخ حفظہ اللہ کی ٹوئیٹ ’’ميّز العلماء‘‘ سے ماخوذ ۔

پیشکش: توحیدِ خالص ڈاٹ کام


بسم اللہ الرحمن الرحیم

علماء کرام کو پہچانیں، کیونکہ ہر کوئی جو منبر پر چڑھے عالم نہيں ہوتا، نہ ہی ہر کوئی جو کسی دینی پروگرام میں شرکت کرے مفتی ہوتا ہے، اور نہ ہی ہر کوئی جو خواب کی تعبیر بتائے مرجع ہوتا ہے، لہذا پہچان وتمیز کیجئے تاکہ کہیں آپ کے افکار نہ اچک لیے جائيں۔

حقیقی علماء کرام کی کچھ نمایاں صفات میں سے یہ ہیں:

1-  وہ امت کے لیے خیر کی کنجیاں ثابت ہوتے ہيں۔

2-  لوگوں کو اس چیز کی جانب رہنمائی کرتے ہيں جو ان کو نفع دے، اور اس چیز سے خبردار کرتے ہيں جو ان کو نقصان دے پورے علم وبصیرت کے ساتھ۔

3-  ان کی غرض وغایت محض اللہ تعالی کی رضا اور اس کے چہرے کی چاہت ہوتی ہے، اور ان کا طریقۂ کار حکیمانہ ہوتا ہے۔

4-  وہ لوگوں کو اس صحیح عقیدےکی طرف دعوت دیتے ہيں جس پر رسول اللہ صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم تھے بنا غلو یا تقصیر کے، اس بارے میں وہ اپنے سلف صالحین کی اقتداء کرتے اور ان کے نقش قدم پر چلتے ہيں۔

5-  علماء ربانی کی یہ حرص ہوتی ہے کہ وہ ہلاکت میں پڑے گمراہ فرقوں سے خبردار کرتے ہيں جیسے خوارج اور جو ان ہی سے نکلنے والے گمراہ فرقے ہیں، اور ان سے بھی خبردار کرتے ہيں جو ان گمراہ فرقوں کا دفاع کرتے ہیں، یا ان کے لیے عذر تراشتے ہیں، یا ان کی حرکتوں کے لیے جواز پیش کرنےکی کوشش کرتے ہيں۔

6-  علماء ربانی کی نمایاں صفات میں سے یہ بھی ہے کہ وہ جماعۃ المسلمین کی حرص کرتے ہيں اور وصیت کرتے ہيں کہ ولی امر (حکمران) کے گرد جمع ہوا جائے، معروف میں اس کی سمع وطاعت کی جائے (کیونکہ یہی حقیقی مفہوم ہے جماعۃ المسلمین کے لزوم کا) اور فتنوں اور اہل فتنہ سے کنارہ کشی اختیار کی جائے۔

October 28, 2018 | الشیخ محمد بن غالب العمری, عقیدہ ومنہج, مقالات | 0

tawheedekhaalis is on Mixlr

Tawheedekhaalis.com

Tawheedekhaalis.com